پیوٹن اگر خاتون ہوتےتو یوکرین کی جنگ نہ ہوتی، برطانوی وزیراعظم | اردو میڈیا

admin
admin 29 جون, 2022
Updated 2022/06/29 at 12:04 شام
290151 023434 updates
290151 023434 updates

فوٹو: فائلبرطانوی وزیراعظم بورس جانسن کا کہنا ہےکہ اگر روسی صدرپیوٹن خاتون ہوتے تو  یوکرین کی جنگ نہ ہوتی۔جرمنی کے شہر برلن میں میڈیا سےگفتگو کرتے ہوئے برطانوی وزیراعظم بورس جانسن کا کہنا تھا کہ روسی صدر پیوٹن اگر خاتون ہوتے تو یوکرین پر حملہ ہوتا اور نہ  پیوٹن اس طرح کی پُرتشدد اور پاگل پن کی مردانہ جنگ کا آغاز کرتے۔ برطانوی وزیراعظم بورس جانسن کا کہنا تھا کہ یوکرین پر پیوٹن کا حملہ زہریلی مردانگی کی بہترین مثال ہے۔ بورس جانسن نے دنیا بھرمیں لڑکیوں کے لیے بہتر تعلیم اور اقتدار کے عہدوں پر خواتین کی زیادہ  تعداد ہونے پر زور دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ سب لوگ جنگ کا خاتمہ چاہتے ہیں لیکن پیوٹن امن کی کوئی پیش کش نہیں دے رہے۔

اس آرٹیکل کو شیئر کریں۔
ایک تبصرہ چھوڑیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

ہمارا فیس بک پیج لائک کریں۔

ہمارے فیس بک پیج کو لائک کرکے تازہ ترین اپڈیٹس حاصل کریں۔


This will close in 30 seconds